10 Comments

ان گنت حوالوں کی اداسی

اَن گنت حوالوں کی اداسی

سَت رنگی آنکھوں میں پِنہاں شوخی
آفاقی حوالوں کے ساتھ
زندگی کے رَمز کا رَس ٹپکاتی ہے
!آفاقیت کیا ہے
تیری آنکھوں کی شکتی
جو دو کناروں کو جوڑے رکھتی ہے
مونا لیزا کیا جانے
جدید دور کا انسان
آنکھوں سے بہنے والی مسکراہٹ
اُس کے چہرے کے نقوش میں تلاش کرتا ہے
اور کایناتی حوالوں سے
!اُسے سمجھنے کی کوشش میں مصروف ہے
تیری آنکھوں کی دِل کش پتلیاں
فطرت کے جتنے حوالے سمیٹ کر
اپنے گردوپیش پر سحر پھونک سکتی ہیں
وہ سب میری شاعری میں مل جائیں گے
لیکن اس حقیقت کا بطلان ممکن نہیں
کہ
میری شاعری اورتیری آنکھوں کے رنگ
کبھی مدغم نہیں ہوسکیں گے
٭٭٭

An-ginat HawaaloN ki Udasi

Sat-rangi aankhoN main pinhaaN shokhi
Aafaaqi hawaaloN k sath
Zindagi k ramz ka rass tapkaati hay
Aafaaqiyat kia hay
Teri aankhoN ki shaktii
Jo do kinaaroN ko joRay rakhti hay
Mona Lisa kia jaanay
Jadeed daor ka insaan
AankhoN say behnay wali muskuraahat
Os ke chehray k naqoosh main talash karta hay
Aor kaayinaati hawaaloN say
Osay samajhnay ki koshish main masroof hay
Tairii aankhoN ki dilkash putliaaN
Fitrat k jitnay hawaalay samait kar
Apnay gard-o-paish par sehr phoonk sakti hain
Wo sab meri shayirii main mill jaayingay
Lekin is haqeeqat ka batlaan mumkin nahi
K
Meri shayirii aor teri aankhoN k rang
Kabhi madgham nahi hosakaingay

Advertisements

10 comments on “ان گنت حوالوں کی اداسی

  1. لیکن اس حقیقت کا بطلان ممکن نہیں
    کہ
    میری شاعری اورتیری آنکھوں کے رنگ
    کبھی مدغم نہیں ہوسکیں گے
    واھھھھھھھھھھھھھھھھھ

  2. تیری آنکھوں کے سوا دنیا میں رکھا کیا ہے

    کوئی میرے دل سے پوچھے تیرے تیر نیم کش کو
    یہ خلش کہاں سے ہوتی جو جگر کے پار ہوتا

    لگتا ہے کہ تیر نشانے پر لگا ہے اور پھر بھی خلش ہے کہ ہو رہی ہے.

  3. kayi baar padhne ke baad haar man li.

    آنکھیں – اور وہ بھی سترنگی.
    بس اتنا تو میر نے دیکھا

    اور اس کے بعد کچھ سمجھ مینن نہیں آیا-
    الله آپ کو اور فکر و عظمت دے-
    اور ہمیں کچھ تھوڑی سی عقل –
    خوش رہیں ہمیشہ –
    yeh khalish ka hi kamaal hai jo kam hone mein nahin aati.
    aap aise aise teer chalaate hain k bas.

    • Oho, ye tu ma’amla ghambeer hogaya hay. chalain main koshish karta hoN — aor is nazm k tukRay alag alag karta hoN, ap phir read karain, hosakta hay k is baar koi sira haath aajaaye. 🙂

      سَت رنگی آنکھوں میں پِنہاں شوخی
      آفاقی حوالوں کے ساتھ
      زندگی کے رَمز کا رَس ٹپکاتی ہے
      ***
      !آفاقیت کیا ہے
      تیری آنکھوں کی شکتی
      جو دو کناروں کو جوڑے رکھتی ہے
      ***
      مونا لیزا کیا جانے
      K
      جدید دور کا انسان
      آنکھوں سے بہنے والی مسکراہٹ
      اُس کے چہرے کے نقوش میں تلاش کرتا ہے
      اور کایناتی حوالوں سے
      !اُسے سمجھنے کی کوشش میں مصروف ہے
      ***
      تیری آنکھوں کی دِل کش پتلیاں
      فطرت کے جتنے حوالے سمیٹ کر
      اپنے گردوپیش پر سحر پھونک سکتی ہیں
      وہ سب میری شاعری میں مل جائیں گے
      ***
      لیکن اس حقیقت کا بطلان ممکن نہیں
      کہ
      میری شاعری اورتیری آنکھوں کے رنگ
      کبھی مدغم نہیں ہوسکیں گے

      • WAH, ab kuchh kuchh dhund chhat rahi hai. aap ki khayalon ki uDarn ghazab ki hai. Yahan ham ko Sona Chandi ka pahla episode yaad aa raha hai: Mulahza kijiye:

        watch 3:33 min to 4:50 min
        “mein aje bi nahin samjha” (me)
        “are tu kade bhi nain samjhe ga” (Rafi)

        lekin aje khchh kuchh samajh aa raha hai.
        Shukria.

Comments Please

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: